صوفیہ امامیہ نوربخشیہ

اوقات نماز


فرض نمازیں پانچ ہیں
فجر: دورکعت
یہ جاننا واجب ہے کہ صبح کی نماز کا ابتدائی وقت صبح صادق کا طلوع ہونا ہے۔ یہ افق پر پھیلنے والی اس روشنی کو کہا جاتاہے جو آہستہ آہستہ سورج طلوع ہونے تک بڑھتی ہے اور اس کا آخر ی وقت سورج کے طلوع سے کچھ وقت پہلے تک ہے۔

ظہر : چاررکعت:
ظہر کی نماز کا ابتدائی وقت سورج کا وسط آسمان سے دس درجے ڈھلنا ہے اور اس کا آخری وقت یہ ہے کہ ہر چیز کا سایہ اس کا دگنا ہوجائے۔ اس سائے میں وہ سایہ شمار نہیں ہوگا جو پہاڑ ی علاقوں میں استواء کے وقت پایا جاتا ہے اور میدانی افق والے علاقوں میں سائے کا صرف دگنا ہونا ہے کیونکہ ان علاقوں میںاستواء کے وقت سایہ نہیں پایا جاتا۔
جمعۃ المبارک: دو رکعت
اس کا وقت بھی ظہر کے وقت کی مانند ہے۔ تاہم وقت عصر شروع ہونے کے بعد جمعہ کی ادائیگی نہیں ہوگی بلکہ ظہر ہی پڑھی جائےگی۔

عصر : چار رکعت:
عصر کی نماز کا ابتدائی وقت ظہر کے وقت کا ختم ہوجاناہے ان دونوں میںکوئی فاصلہ نہیں ۔ آخری وقت سورج کے غروب ہونے سے کچھ دیر پہلے ہے۔

مغرب: تین رکعت:
مغرب کا ابتدائی وقت سورج کا غروب ہو نا ہے اور آخر ی وقت کھلے میدان والے افق میں سرخ شفق کے غروب سے کچھ دیر پہلے تک ہے اور بلند پہاڑوں سے ڈھکے افق والے علاقوں میں سفید شفق کے غروب سے کچھ دیر پہلے تک ہے۔

عشا ء چار رکعت:
عشاء کا ابتدائی وقت شفق کا غروب ہے دونوں میں کوئی فاصلہ نہیں اور اس کا آخری وقت صبح صادق کے طلوع سے کچھ دیر پہلے تک ہے اگر اس کی ادائیگی میں کسی مجبوری کی بناء پر صبح سے کچھ دیر پہلے تک تاخیر آجائے تو ادا ہوگی قضاء نہیں۔ عشاء کی نماز کسی ضرورت کے بغیر تاخیرکرنا نصف رات بلکہ تہائی رات تک درست ہے۔